Harmful Effects of Eating Meat

Harmful Effects of Eating Meat

زیادہ گوشت کھانا صحت کے لیے مضر قرار

انسانی تاریخ کا طویل ترین دور زیادہ تر سبزی خوری کارہا ہے اور اب بھی دنیا کی بڑی آبادی کا یہی طرز زندگی ہے۔ ہمارے ملک میں گوشت بہت زیادہ کھایا جاتا ہے۔ کڑاہی گوشت،نہاری، پسندے،بریانی،کُنا،بہاری بوٹی،سیخ کباب اور گولا کباب وغیرہ کے اشتیاق نے لوگوں کا خرچ بہت بڑھا دیا ہے ۔ یہ بات قابل ذکر ہے کہ گیارہ ترقی یافتہ ممالک دنیا کا ۴۰ فی صد گوشت کھاتے ہیں۔

عارضہ قلب

یہ بات ثابت ہوچکی ہے کہ عارضہٴ قلب ان ممالک میں زیادہ ہے، جو گوشت خور ہیں اور حیوانی چربیاں سب سے زیادہ کھاتے ہیں، عارضہٴ قلب میں بھی سب سے زیادہ مبتلا ہوتے ہیں اور ان میں موت کی شرح بھی سب سے زیادہ ہے۔

بلند فشار خون

اور اس بات میں اب کوئی شک وشبہ نہیں کہ سبزی خوروں میں بلند فشارِ خون اور کولیسٹرول کم ہوتا ہے۔ ان کی نسبت گوشت خوروں میں زیادہ ہوتا ہے۔ دودھ اور دودھ سے بنی ہوئی چیزیں اور انڈے کھانے والوں میں بھی سبزی خوروں کی نسبت کولیسٹرول اور فشارِ خون زیادہ ہوتا ہے۔ عارضہٴ تاجیِ قلب میں اہم سبب کولیسٹرول اور جمی ہوئی چکنائی ہے، جوحیوانی غذاؤں سے حاصل ہوتی ہے۔

کینسر کا باعث

گزشتہ دوعشروں کی تحقیق نے ثابت کیا ہے کہ جس غذا سے عارضہٴ تاجیِ قلب کے امکانات میں کمی ہوتی ہے ، وہی غذا بڑی آنت (قولون)،پستان اور رحم وغیرہ کے سرطان میں بھی کمی کا باعث ہوتی ہے۔ بڑی آنت کے سرطان کا سبب گوشت، چربی اور کولیسٹرول کی باقی ماندہ گاد ہے، جس سے سرطانی مواد پیدا ہوتا ہے اور وہ بڑی آنت کے قریب میں رہتا ہے، کیوں کہ اس طرح کی غذا کھانے والے قبض میں مبتلا رہتے ہیں۔ رحم اور پستان کے سرطان کا سبب اس غذا سے کثیر مقدار میں نسوانی ہارمون ایسٹروجن کی پیداوار ہے، جو سرطانی اثرات رکھتی ہے۔

کیا گوشت کھانا چھوڑدینا چاہیے؟

سبزی خوری کے فوائد حاصل کرنے کے لیے مطلق سبزی خور ہوجانا ضروری نہیں۔ دراصل ہر کھانے میں یا ہر روز گوشت کھانا غیر ضروری ہے۔ کھانوں کا اہتمام اس طرح کیا جائے کہ سبزیوں ، ترکاریوں پر انحصار بڑھتا اور گوشت وچربی پر کم ہوتا جائے۔ گوشت کے سالن میں سبزی کی مقدار زیادہ ہو۔ ہمارا نقطٴ نظریہ ہونا چاہیے کہ اصل کھانا دال ، سبزی،پھلی اور اناج ہے، باقی گوشت کی قلیل مقدار صرف خوشبو اور ذائقے کے لیے ہے۔