mango_health_benefits

Mango Aam khane ke Fayde

آم کھائیں، صحت، طاقت اور حسن پائیں

اگر کوئی آپ سے پوچھے کہ پزا، برگر، بروسٹ، شوارما کھانے کے کیا کیا فائدے ہیں تو آپ کیا جواب دیں گے؟ کیا آپ کو ان چیزوں کو کھانے سے حاصل ہونے والا کوئی فائدہ معلوم ہے، یقینی طور پر آپ کو جواب نفی میں ہوگا۔ لیکن اگر کوئی پوچھے کہ پھل کھانے سے کیا فوائد ہوتے ہیں تو آپ ایک لمبی فہرست ترتیب دے سکتے ہیں۔ لیکن پھر بھی لوگ پھلوں سے زیادہ ان فضول قسم کی چیزوں کو ترجیح دیتے ہیں۔ لیکن آج جس پھل کے فوائد کے بارے میں ہم آپ کو بتائیں گے اس کو یقنی طور پر آپ بہت شوق سے کھائیں گے۔ پھلوں کے بادشاہ آم کی غذائی خصوصیات اور اہم فوائد Mango Aam khane ke Fayde سے آگاہ کر رہے ہیں۔

آم کو پھلوں کا بادشاہ کہنے کی کئی وجوہات ہیں۔ ذائقہ کے اعتبار سے تمام پھلوں میں اتنا رسیلا، مزیدار پھل اور کوئی بھی نہیں ہے۔ آم کی سب سے زیادہ اقسام پائی جاتی ہیں اور ہر قسم ایک دوسرے سے ذائقے میں منفرد ہے۔ آم ہماری تہذیب کا بھی حصہ ہیں۔ آم کے موسم میں خاص طور پر ایک دوسرے کو آم کی پیٹیاں تحفہ میں بھجوائی جاتی ہیں۔

آم ایک ایسا پھل ہے جس کو ہر کوئی بہت شوق سے کھاتا ہے۔ لیکن کیا آپ کو معلوم ہے کہ آم کھانے سے ہم کون کون سی پیچیدہ بیماریوں سے بچ سکتے ہیں۔ آم کے چند اہم اہم فوائد درج ذیل ہیں:

آم کینسر سے بچاؤ کا اہم ذریعہ

طبی ماہرین کے مطابق آم میں شامل اینٹی آکسیڈنٹ آنتوں اور خون کے کینسر کے خطرے کو کم کرتا ہے جب کہ گلے کے غدود کے کینسر کے خلاف بھی یہ مؤثر کردار ادا کرتا ہے۔ ہارورڈ یونیورسٹی کے ماہرین کے مطابق کولون یا بڑی آنت کے سرطان کے خلاف آم ایک اہم مدافعانہ ہتھیار ثابت ہوا ہے اورآم کھانے کے شوقین لوگوں میں اس سرطان کی شرح نمایاں طور پر کم دیکھی گئی ہے۔

جلد اور آنکھوں کی حفاظت

طبی ماہرین کے مطابق آم وٹامن ای سے بھرپور ہے جس کے استعمال سے انسان صحت مند اور شاداب رہتا ہے جب کہ یہ وٹامن جلد کو ترو تازگی فراہم کرتے ہیںاور چہرے پر دانوں اور کیل مہاسوں سے بچاتے ہیں۔

آم میں شامل وٹامن سی خون میں کولیسٹرول کی مقدار کم کرتا ہے جب کہ اس میں موجود وٹامن اے بینائی کو کمزور ہونے سے بچاتا ہے اور اس کے علاوہ یہ پھل سورج کی تیز شعاعوں سے بھی آنکھوں کو خراب ہونے سے بچاتا ہے۔

ہڈیوں کو مضبوط بنائے

ماہرین کا کہنا ہے کہ آم کا استعمال ہڈیوں کی بیماریوں سے بھی محفوظ رکھتا ہے اس میں موجود کیلشیم ہڈیوں کو مضبوط رکھتا ہے اور آم کھانے کے شوقین افراد میں وقت سے پہلے ہڈیوں کی کمزوری کے امکانات کم ہوجاتے ہیں۔

ہیٹ اسٹروک سے بچائے

آم کو پیلا ہونے سے پہلے ہرے رنگ میں درخت سے اتار لیا جاتا ہے اور اسی کو کیری کہتے ہیں۔ کیری کا جوس شدید گرمی میں بہت فائدہ مند ثابت ہوتا ہے۔ کیری کا جوس انسان کے جسم میں ٹھنڈک پہنچاتا اور ہیٹ اسٹروک سے بچاتا ہے۔ کیری کا جوس گردوں کےلئے بہت مفید ہے۔

کچا سبز آم وٹامن سی کی وافر مقدار کے سبب خون کے امراض کا بھی کارگر علاج ہے۔ یہ خون کی نالیوں کی لچک میں اضافہ کرتا ہے اور خون کے نئے خلیے بنانے میں مدد دیتا ہے۔

قوت مدافعت میں اضافہ

آم کے استعمال سے غذائی فولاد (فوڈ آئرن) کا انجداب بڑھتا ہے جبکہ خون کا اخراج رکتا ہے۔ یہ تپ دق‘ انیمیا‘ ہیضہ اور پیچش کے خلاف بدن میں مزاحمت بڑھاتا ہے۔
آم میں وٹامن سی اور وٹامن اے کی تعداد کثرت سے پائی جاتی ہے اوریہ انسان کی قوت مدافعت کو بڑھانے میں مدد دیتا ہے۔ اسکے علاوہ آم میں کیروٹین کی 25 اقسام پائی جاتی ہیں جو کہ انسان کی قوت مدافعت کو صحت بخش اور طاقتور بناتا ہے۔

دمہ سے بچائے

ماہرین کے مطابق آم میں موجود اجزا انسانی جسم کے لیے انتہائی مفید ثابت ہوتے ہیں اور جو لوگ آم کا زیادہ استعمال کرتے ہیں ان کے دمے کے مرض میں مبتلا ہونے کے امکانات کم سے کم ہوجاتے ہیں۔

دل کے امراض میں مفید

ماہرین کا کہنا ہے کہ دل کے امراض میں مبتلا افراد کے لیے آم ایک بہترین پھل ہے اس میں موجود پوٹاشیم ،فائبر اور وٹامن دل کی صحت میں اضافے کا باعث بنتے ہیں جب کہ اس میں موجود بڑی تعداد میں پوٹاشیم بلڈ پریشر کو کنٹرول کرنے میں معاون ثابت ہوتا ہے۔

نظام ہضم کے لیے فائدہ مند

آم میں موجود ریشے جنہیں فائبر بھی کہا جاتا ہےآنتوں کی صفائی کرتے ہیں اور نظام ہضم کو درست رکھنے میں مدد دیتے ہیں۔ اگر کسی کو قبض کا مسئلہ ہو تو وہ لازمی آم کھائیں۔

جراثیمی بیماریوں سے تحفظ

ماہرین صحت کے مطابق تمام بیکٹیریا کا حملہ اس لیے ممکن ہوتا ہے کہ جسم کی خارجی تہہ بنانے والی بافتیں کمزور ہوجاتی ہیں تاہم آم کے موسم میں اس کا آزادانہ استعمال بافتوں کی اس کمزوری کو دور کرتا ہے چنانچہ بیکٹیریا کا جسم میں داخلہ ممکن نہیں رہتا اس کیفیت کے بعد پے در پے انفیکشن مثلاً نزلہ‘ زکام اور ناک کی سوزش رونما نہیں ہوئی۔ اس تحفظ کی وجہ آم میں پائی جانے والی وٹامن اے کی وافر مقدار ہے۔